جماعت اسلامی یا قومی ناسور.

یہ بلاگ چار دسمبر کو لکہا گیا تها.3دسمبر الطاف حسین کی تقریر آج بهت ساری باتوں کو سمجهنے میں معاون ہے.

Junaid Raza Zaidi

Image

.جب تک کسی بھی شخص یا قوم کو اپنی غلطی یا کوتاهی کا احساس نھیں هوگا وه بھتری کی جانب نھیں بڑھےگا

.ادراک کسی بھی پهلو سے هو همیشه نتایج مثبت هونے چاهیں.

ادراک وتدارک کی منازل جب طے هوتی هیں تو اقوام عروج بام پاتی هیں

آج کافی دنوں کے بعد ایم کیو ایم کے مرکز 90 جا پهنچے.اس مھنگایی کے پر فتن دور میں جب کسی کے پاس بھی وقت نھیں ایسے میں هزاروں کارکنان دیوانه وار راسطے میں هی

جیے الطاف کے نعرے لگاتے نظر آگیے. لال قلعه پهنچتے هی کچھ ھی دیر میں اعلان هوا اور الطاف حسین بھایی کا ٹیلیفونک خطاب شروع هوا.

الطاف بھایی کا خطاب تلاوت کلام پاک و درود تنجینا سے شروع هوا.آغاز خطاب میں هی الطاف بھایی کا لحجه بھت دبنگ تھا جو که آخر تک سلامت رها.ایک جامع خطاب تھا که جس میں عسکری قیادت ، قانون نافذ کرنے والے…

View original post 769 more words

Advertisements

Author: Junaid Raza Zaidi

The Only Sologon is Pakistan First

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s